Russia Ne America Ko Terrorist Qarar Dekar Iran Main Mudahelat Ka Ilzam Laga Diya

217

ماسکو: اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی جانب سے واشگٹن کی گزارش پر ایران میں خونی مظاہروں پر اجلاس طلب کیے جانے پر روس نے امریکا پر ایران میں مداخلت کا الزام لگادیا۔

فرانسیسی خبر رساں ادارے اے ایف پی نے انٹر فیکس نیوز ایجنسی کا حوالے دیتے ہوئے بتایا کہ روس کے ڈپٹی وزیر خاجہ سرجئی ریبکوف کا کہنا تھا کہ امریکا دیگر ممالک کے امور میں کھلے عام اور خفیہ دونوں طریقوں سے مداخلت کر رہا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ سلامتی کونسل میں ایران کے داخلی امور پر اجلاس طلب کرنے کے امریکی قدم کو ہم اس ہی نظرے سے دیکھتے ہیں۔

انہوں نے واشنگٹن پر الزام لگایا کہ وہ دیگر ممالک کی خود مختاری پر جمہوریت اور انسانی حقوق کے نام پر حملے کر رہا ہے۔

خیال رہے کہ ایران کے شہر مشہد میں اقتصادری مسائل اور حکومت کے شاہانہ طرز زندگی کے خلاف جمعرات (28 دسمبر) کو مظاہروں کا آغاز ہوا اور جب مظاہرین کو روکنے کی کوشش کی گئی تو وہ جلد ہی حکومت مخالف مظاہروں میں تبدیل ہوگئے جس کے نتیجے میں اب تک 21 افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: ایران میں ایک ہفتے سے احتجاج جاری، جھڑپوں میں 12افراد ہلاک

واضح رہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے بھی ایرانی عوام کو ان کی حکومت واپس دلانے کا اعلان کردیا ہے۔

ٹرمپ انتظامیہ نے 2015 میں ایران سے کیے گئے جوہری معاہدے پر بھی سوالات اٹھا رکھے ہیں۔

روسی خبر رساں ادارے کے مطابق ڈپٹی وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ اگر امریکا اس معاملے میں ایرانی حکومت پر دباؤ بڑھانے کے لیے وجوہات کی تلاش کر رہا ہے، جو ہمیں لگتا وہ یہی چاہتا ہے تو ہمیں یہ ہرگز قبول نہیں ہوگا۔


MOSCOW: Russia accused the United States on Friday of interfering in Iranian affairs as the UN Security Council prepared to hold a meeting at Washington’s request on deadly protests in Iran.

“The United States continues to interfere both openly and covertly in the internal affairs of other countries. They do so shamelessly,” Russia’s Deputy Foreign Minister Sergei Ryabkov was quoted as saying by Interfax news agency.

“This is how we view the American initiative to convene the UN Security Council over a situation that is of purely national concern in Iran.”

Ryabkov accused Washington of “directly attacking the sovereignty of other states under the pretext of being concerned about democracy and human rights.”

A total of 21 people have died and hundreds have been arrested since December 28 as protests over economic woes turned against the Iranian regime as a whole, with attacks on government buildings and police stations.

In response, big pro-regime rallies have broken out. They were rumbling on for a third day on Friday.

US President Donald Trump has pledged to help Iranians “take back” their government.

His administration has also cast doubt on the landmark 2015 deal on Iran’s nuclear activities.

“If the United States are seeking reasons which have nothing to do with this accord in order to raise pressure on Iran, which is what they seem to be doing, then that is an unacceptable method and unworthy of a great power,” Ryabkov was quoted as saying by Russian news agency RIA Novosti.