عاصمہ جہانگیرکی نمازِ‌جنازہ لاہورمیں ادا کردی گئی

42

لاہور: عاصمہ جہانگیرکی نمازِ‌جنازہ لاہورمیں ادا کردی گئی ہے، نمازِ جنازہ مولانا مودودی کے بیٹے فاروق حیدرمودودی نے پڑھائی.

نمازِجنازہ میں سیاستدان، عدلیہ کے اراکین، بیوروکریٹس اوردیگرشامل تھے. نمازِ جناہ کے بعد عاصمہ جہانگیرکی تدفین بیدیاں روڈ پرکی جائے گی.
عاصمہ جہانگیرمعروف بیوروکریٹ ملک غلام جیلانی اورسبیحہ جیلانی کے بیٹی تھی‌‌‌‌ اوران کی پیدائش لاہورمیں 27 جنوری 1952ء میں ہوئی. عاصمہ جہانگیرانسانی حقوق کی علمبرداری اورجمہوریت کی طرف داری کی وجہ سے مشہورتھیں. عاصمہ جہانگیرکے خاوند طاہرجہانگیرہیں اورانہوں نے اپنے پیچھے دوبیٹیاں اورایک بیٹا چھوڑا ہے.

عاصمہ جہانگیر وہ پہلی پاکستانی خاتون وکیل تھیں جن کو سپریم کورٹ کی سینئرایڈوکیٹ کے طورپرتعینات کیا گیا. اس وقت سپریم کورٹ میں تقریباً 3000 وکلاء ہیں لیکن سپریم کورٹ نے صرف 200 کے قریب وکلاء کو سینئرایڈوکیٹ کا عہدہ دیا ہے. عاصمہ جہانگیر انڈیپینڈنٹ لائرزگروپ کی سربراہ بھی تھیں.

Comments

Loading...