اداکارہ مہوش حیات کو 23 مارچ یوم پاکستان کے موقع پر تمغہ امتیاز سے نوازا گیا—.

پاکستان کی نامور اداکارہ مہوش حیات کو یوم پاکستان کے موقع پر پاکستانی فلم انڈسٹری میں ‘نمایاں کارکردگی’ پر ‘تمغہ امتیاز’ سے نوازا گیا جس پر انہیں کافی سراہا گیا جب کہ مختلف حلقوں کی جانب سے شدید تنقید بھی کی جارہی ہے۔

مہوش حیات نے یوم پاکستان کی تقریب میں ایوان صدر میں تمغہ امتیاز حاصل کرنے کے بعد سوشل میڈیا انسٹاگرام پر اہل خانہ سمیت دوستوں، نامور شخصیات اور مداحوں کا شکریہ ادا کیا اور اپنے اداکارہ بننے کے سفر کو سب سے شیئر کیا۔

 

View this post on Instagram

 

An eight year old girl went to the PTV studios holding her mother’s hand tightly. She was totally clueless about all the hustle and bustle going on around her. But she was equally fascinated by the lights, the cameras and the way in which everybody was hard at work including her mother who was an actress. Even as a child the wobbly sets amused her but she could see on the screens the magic being woven in that studio creating dreams for so many people. Yesterday that same little girl arrived at the Aiwan e sadr holding tightly on to her mother’s hand equally bemused by her surroundings. That girl knows that she is blessed to be there receiving such a prestigious honour in the company of such distinguished people following in the footsteps of so many legends, so many of her own heroes. At heart she remains that simple little girl from Karachi who has been fortunate to live her dreams. Her journey from that PTV studio to the Awan-e-sadr has been a long one and by no means the easiest. But never in her wildest dreams did she see this recognition coming at such a tender age. Nor did she see the role she would go on to play in the revival of Pakistani Cinema and her contribution being acknowledged in this way…! Thank you to the Government of Pakistan and the President for bestowing this honour upon me and making the dream of that little girl come true. Today, I share this with all the other girls in Pakistan who have a dream, to them I simply say, “Hope lies in dreams, in imagination, and in the courage of those who dare to make dreams turn into reality.” Thank you also to all my family, friends and colleagues who have shared this wondrous journey and above all to all the fans who have supported me each step of the way and made me worthy of this award! 🙏🇵🇰 #MehwishHayat #Tamghaeimtiaz 🎖#Medalofexcellence #pakistanzindabad 💚

A post shared by Mehwish Hayat (@mehwishhayatofficial) on

اداکارہ نے انسٹاگرام پر اپنی والدہ کے ساتھ تصویر شیئر کرتے ہوئے جذبات کا برملا اظہار کیا اور بتایا کہ ان کے بچپن کا خواب پورا ہوگیا ہے۔

لیکن جب سے حکومت پاکستان کی جانب سے اداکارہ کے لیے ‘تمغہ امتیاز’ کے اعزاز کا اعلان ہوا تب سے مداحوں کے درمیان ایک نئی بحث چھڑ گئی جس کا سلسلہ اب تک تھمنے کا نام نہیں لے رہا۔

درانی نامی ٹوئٹر صارف تنقید کرتے ہوئے لکھتے ہیں کہ آپ (اداکارہ) کو میڈل دینے سے میڈل نے اپنی اہمیت کھو دی ہے، آپ نے بالکل بھی کچھ نہیں کیا کہ آپ اس سب کی حقدار ہوتیں۔

وقاص مغل نامی صارف لکھتے ہیں کہ آپ نے کونسی انسانی خدمات سرانجام دی ہیں؟ کونسا ایسا معرکہ سر کیا کہ قوم کو آپ کی وجہ سے فوائد حاصل ہوئے ہوں۔

جب کہ دیگر مداحوں نے ان کی اداکاری کو خوب سراہا اور انہیں فخر پاکستان قرار دیا۔

تنقید کرنے والوں نے تبصرے کرتے ہوئے مزید لکھا کہ ‘تمغہ امتیاز’ کا مقام بہت بڑا ہے جس کے لیے لازوال خدمات انجام دینی پڑتی ہیں، اداکارہ نے کا مختصر فلمی کیرئیر ہے، اس لیے تمغہ امتیاز کے اصل حقدار اسکوارڈن لیڈر حسن صدیقی تھے۔

تمغہ امتیاز کسے ملتا ہے؟

ایسے میں یہاں بتاتے چلیں کہ تمغہ امتیاز کے اعزاز سے کن شخصیات کو نوازا جاتا ہے۔

تمغہ امتیاز حکومت پاکستان کی جانب سے دیا جانے والا چوتھا بڑا سول اعزاز ہے جو افواج پاکستان کے سپہ سالار یا پھر ایسے فرد کو دیا جاتا ہے جس نے ملک کے لیے لازوال خدمات انجام دی ہوں یا جس سے معاشرے میں مثبت تبدیلی رونما ہوئی ہو۔