پاکستان نے 700کلومیٹر تک خشکی اور سمندر میں مار کرنے والے ”بابر“کروز میزائل کا تجربہ کرلیا۔
پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر)کے مطابق پاکستان نے آج ”بابر کروزمیزائل “کا تجربہ کرلیا ،میزائل ”ویپن سسٹم 1“حاملیت رکھتا ہے جو خشکی اور پانی میں اپنے 700کلومیٹر تک ہدف کو نشانہ بنا سکتا ہے۔میزائل سٹیلتھ ٹیکنالوجی کا حامل ہے جو مختلف قسم کے ”وار ہیڈ“لے جانے کی صلاحیت رکھتا ہے۔
جدیدآلات سے مزین یہ میزائل جی پی ایس کے بغیر بھی اپنے ہدف تک پہنچ سکتاہے ،اس تجربے سے پاکستان کے دفاع میں مزید مضبوطی آئے گی۔ڈائریکٹر جنرل، سٹریٹجک پلانز ڈویژنز،چیرمین نیسکام ، سٹریٹجک پلانز ڈویژنز کے سنئیر افسران،سٹریٹجک فورسز ،سائنسد انوں اور انجینرز نے اس کامیاب تجربے کودیکھا۔
مسلح افواج کے سربراہان اورجوائنٹ چیفس آف سٹاف نے اس کامیاب تجربے پر نیسکوم اور این ڈی سی کے سائن دانوں اور انجنئیرز کومبارک بادی ہے۔
صدر مملکت اور وزیر اعظم نے بھی کامیاب تجربے پرسائنسدانوں اور انجینرزکو سراہا۔

Pakistan successfully test fired an enhanced range version of indigenously developed Babur Cruise Missile. The weapon system incorporates advanced aerodynamics and avionics that can strike targets both at land and sea with high accuracy at a range of 700 KMs