وزیر اعظم عمران خان کے استعفیٰ بارے دھماکہ خیز خبر آگئی ، فواد چوہدری کی تصدیق۔۔۔ وزیراعظم کسی بھی ڈیل کی صورت میں استعفیٰ دے دیں گے، وزیر اطلاعات کا کہنا ہے کہ عمران خان نے 22 سال کرپشن کیخلاف جدوجہد کی، اس حکومت کسی کو کسی قسم کی ڈھیل یا ڈیل نہیں دے گی، وزیراعظم کا کہنا ہے کہ اگر مجھے کوئی ڈیل کرنا پڑی تو مستعفیٰ ہو جاوں گا۔ تفصیلات کے مطابق وزیر اطلاعات فواد چوہدری نے کہا کہ عمران خان نے 22سال کرپشن کے خلاف جدوجہد کی ، یہ کوئی ذاتی لڑائی نہیں ۔انہوں نے کہا کہ کسی کو این آر او مل جائے یہ نا ممکن ہے ۔چودھری فواد حسین نے کہا کہ واضح ہو جانا چاہیے کہ پی ٹی آئی کے دور

حکومت میں کسی کو این آر او ملے گا ۔ وزیر اطلات نے کہا کہ ڈیل ہو گی نہ ڈھیل ہو گی ، بدعنوانی مقدمات کو منطقی انجام تک پہنچائیں گے۔وزیر اطلاعات نے کہا کہ سینئر ارکان نے پبلک اکاؤنٹس کمیٹی میں شہباز شریف کے کردار پر شدید اظہار تشویش کیا ،شہباز شریف نے پبلک اکاؤنٹس کمیٹی میں نیب کے لوگوں کو طلب کر کے دباؤ ڈالا ،شہباز شریف،مسلم لیگ ن پی اے سی کو بدعنوانی مقدمات کیلئے ڈھال کے طور پر استعمال کر رہے ہیں ۔وزیر اطلاعات نے کہا کہ سعد رفیق کو اسی ڈھال کے لئے پی اے سی میں آنے کا کہا جا رہا ہے ۔وزیر اطلاعات نے کہاکہ علیم خان نے نیب کی گرفتاری کے فوراً بعد عہدے سے استعفیٰ دیا۔وزیر اطلاعات نے کہا کہ علیم خان کا استعفیٰ ثابت کرتا ہے کہ پی ٹی آئی اور دیگر سیاسی جماعتوں کے کلچر میں کیا فرق ہے ۔ وزیر اطلاعات نے کہا کہ علیم خان نے استعفیٰ دے کر شاندار روایت کا آغاز کیا ۔ چودھری فواد حسین نے کہا کہ علیم خان جانتے ہیں انہوں نے اپنے عہدے کا استعمال کیے بغیر نیب مقدمات کا سامنا کرنا ہے ۔ انہوںنے کہا کہ شہباز شریف کی بھی اسی طرح کی سوچ ہونی چاہیے۔چودھری فواد حسین نے کہا کہ مطالبہ کرتے ہیں کہ شہباز شریف کے چیئرمین پی اے سی کے عہدے سے علیحدہ ہوں ۔ انہوں نے کہا کہ ایسا نہیں لگنا چاہیے کہ توازن قائم کیا جا رہا ہے ۔انہوںنے کہاکہ احتساب میں شفافیت اور میرٹ نظر آنا چاہیے ۔

Daily Ausaf