دوحہ: وزیراعظم عمران خان کی دوحہ میں قطری ہم منصب عبداللہ بن ناصر بن خلیفہ الثانی سے ملاقات، دونوں ممالک کے درمیان دوطرفہ تعلقات اور اقتصادی تعاون بڑھانے پر بات چیت ہوئی۔

قطری وزیراعظم کی جانب سے عمران خان کے اعزاز میں عشایئے کا بھی اہتمام کیا گیا۔ وزیراعظم عمران خان آج قطری امیر سمیت اہم شخصیات سے ملیں گے اور پاکستانی کمیونٹی سے بھی خطاب کریں گے۔

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی، وزیر خزانہ اسد عمر، وزیر پیٹرولیم غلام سرور خان اور معاون خصوصی زلفی بخاری بھی وزیراعظم کے ہمراہ تھے۔

اس سے پہلے وزیراعظم عمران خان وفد کے ہمراہ دوحہ پہنچے تو قطری وزیر مملکت خارجہ نے حماد انٹرنیشنل ایئرپورٹ پر وفد کا استقبال کیا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ پاکستان 4 ارب ڈالر ادھار ایل این جی کی درآمد پر بات کرے گا۔ذرائع نے بتایا کہ پاکستان ایل این جی کی قیمت پر نظرِ ثانی کی تجویز بھی دے گا، دوسری طرف فیفا ورلڈ کپ 2022 کے لیے ایک لاکھ نوکریوں کے کوٹے کا مطالبہ کیا جائے گا۔وزیرِ اعظم نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ دورہ قطر انتہائی اہمیت کا حامل ہے، قطر اور پاکستان کے دیرینہ برادرانہ تعلقات ہیں، پاکستان برادر مسلم ممالک کے درمیان مثالی تعلقات کا خواہاں ہے۔