اپنے ٹویٹر پیغام میں نعیم بخاری کا کہنا تھا کہ میں نوازشریف پر جوتا پھینکے جانے کی مذمت کرتا ہوں یہ انتہائی غلط روش ہے لیکن

عوام انکے کرتوت دیکھ کر یہ سلوک کر رہی ہے اگر میاں صاحب قانون کی عدالت سے بھاگ کر عوام کی عدالت میں نہ آتےتو عزت نفس محفوظ رہتی اب عوام کی عدالت عوامی فیصلے سُنا رہی ہےاُمید ہےاب میاں صاحب کو قانون کی عدالت اچھی لگ رہی ہو گی یا شاید میاں صاحب سو پیاز اور سو جوتے دونوں کھائیں گے ہم عوامی عدالت کے اس فیصلے کو قبول کرتے ہیں کیونکہ میاں صاحب اس عدالتی فیصلے کے منتظر تھے

مزید نعیم نے نواز شریف کو تسلی بھی کہ اور کہا کہ میاں صاحب چند دنوں کی بات ہے لوگ بھول جائیں گے