قطری وزیر خارجہ کی ایرانی صدر سے ملاقات ، قاسم سلیمانی کی موت پر اظہارِ تعزیت

ایرانی صدر حسن روحانی تہران میں قطری وزیر خارجہ شیخ محمد بن عبدالرحمان آل ثانی کا تہران میں خیر مقدم کررہے ہیں

قطری وزیر خارجہ شیخ محمد بن عبدالرحمان آل ثانی نے تہران میں ایرانی صدر حسن روحانی سے ہفتے کے روز ملاقات کی ہے اور ان سے سپاہِ پاسداران انقلاب کی القدس فورس کے کمانڈر میجر جنرل قاسم سلیمانی کی امریکا کے فضائی حملے میں ہلاکت پر تعزیت کا اظہار کیا ہے۔

ایران کی سرکاری خبررساں ایجنسی ایرنا کے مطابق مہمان وزیر خارجہ نے صدر حسن روحانی سے گفتگو کرتے ہوئے کہا:’’ ایرانی عوام اور حکومت جس صورت حال سے دوچار ہوئے ہیں،قطر ان کے گہرے دکھ، درد اور افسوس کو سمجھتا ہے۔ہم ایرانی عوام سے تعزیت کا اظہار کرتے ہیں۔‘‘

انھوں نے کہا:’’ جو کچھ ہوا ہے، ہم بالکل بھی اس کی توقع نہیں کرتے تھے یا اس طرح کا کبھی کوئی فیصلہ کیا جائے گا،اس طرح کے اقدامات کی کوئی مثال نہیں ملتی۔ہمیں اس گہرا صدمہ پہنچا ہے اور تشویش لاحق ہے۔‘‘

محمد آل ثانی نے مزید کہا‘‘ قطر مشکل وقت میں ایران کی حمایت کو کبھی فراموش نہیں کرے گا اور ہم خود کو ایران کی طرف ہی سمجھتے ہیں۔ہم ایران کے ساتھ اپنے تعلقات کو فروغ دینے کے لیے پُرعزم ہیں۔‘‘

صدر حسن روحانی نے قطری وزیرخارجہ سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ایران اپنے اتحادیوں سے یہ توقع کرتا ہے کہ وہ قاسم سلیمانی کی ہلاکت پرامریکا کی دوٹوک انداز میں مذمت کریں۔

انھوں نے دعویٰ کیا کہ ’’ اسلامی جمہوریہ ایران نے کبھی ایسی کشیدگی کا آغاز نہیں کیا ہے جس سے علاقائی عدم استحکام کی راہ ہموار ہوتی ہو۔‘‘انھوں نے امریکا پر خطے میں کشیدگی کو بڑھاوا دینے کے لیے غیر ذمے دارانہ اقدامات کا الزام عاید کیا ہے۔

’’خطے کے ملکوں کو اس بات کا ادراک کرناچاہیے کہ جب تک امریکا خطے میں موجود ہے تو یہاں کبھی امن قائم نہیں ہوگا۔‘‘ ایرانی صدر کا کہنا تھا۔

حسن روحانی سے ملاقات سے قبل آل ثانی نے ایرانی وزیر خارجہ محمد جواد ظریف سے ملاقات کی اور ان سے قاسم سلیمانی کی ہلاکت سے پیدا ہونے والی صورت حال پر تبادلہ خیال کیا۔

قاسم سلیمانی جمعہ کو علی الصباح امریکا کے ڈرون حملے میں مارے گئے تھے۔امریکی فوج کو اس حملے کا حکم خود صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے دیا تھا۔ٹرمپ انتظامیہ کے ایک اعلیٰ عہدہ دار نے دعویٰ کیا ہے کہ مقتول قاسم سلیمانی مشرقِ اوسط میں امریکی اہلکاروں پر حملوں کی منصوبہ بندی کررہے تھے۔

دریں اثناء ابو ظبی کی شیخ زاید جامع مسجد کے خطیب واسم یوسف نے کہا ہے کہ امریکا کے جس ڈرون طیارے کے حملے میں قاسم سلیمانی ہلاک ہوئے ہیں،اس نے قطر میں واقع امریکا کے العدید ائیربیس سے اڑان بھری تھی۔

العربیہ