سعودی عرب کے معروف دانشور شیخ ڈاکٹر الغامدی نے سوشل میڈیا پر سری دیوی کے حوالے سے جاری اس بحث کو یہ کہہ کر نمٹا دیا جس میں اسے رحمت کی دعائیں دینے نہ دینے پر موافق مخالف گروہ پیدا ہو گئے تھے کہ کسی بھی غیر مسلم کو اسکے مرنے پر اللہ تعالیٰ کی رحمت کی دعائیں دینا جائز نہیں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ سے گفتگو میں شیخ الغامدی کا کہنا تھا کہ غیر مسلموں کو مرنے پر رحمت کی دعائیں دینے کی مخالفت کو شدت پسندی شمار کرنا درست نہیں۔ بعض لوگ اس حوالے سے شرعی حکم کو شدت پسندی اور اسلام کی بابت غلط تصورات کی ترویج کا نام دے رہے ہیں۔ یہ کسی طور درست نہیں۔ انہوں نے کہا کہ امن پسند زندہ غیر مسلموں کے ساتھ حسن سلوک اچھی بات ہے۔ قرآن کریم نے ہمیں اسکا حکم دیا ہے۔ مر جانے والے غیر مسلموں اور معاشرے میں زندہ سلامت غیر مسلموں کے درمیان فرق کیا جانا ضروری ہے۔ اگر کسی مسلمان کے رشتہ دار غیر مسلم ہوں، کسی مسلمان کی بیوی عیسائی یا یہودی ہو یا کسی مسلمان کے پڑوسی اور ملنے جلنے والے غیر مسلم ہوں تو ان کے ساتھ اچھے انداز سے پیش آنا، بہترین طرز معاشرت اختیار کرنا یا ان کے دکھ سکھ میں اچھے طریقے سے پیش آنے سے منع نہیں کیا گیا۔

اسلام نے اس بات سے منع کیا ہے کہ اگر کسی غیر مسلم کا انتقال ہو جائے تو اسکے گناہوں کی مغفرت کی دعا کی جائے یا اس کیلئے رحمت کی دعائیں مانگی جائیں۔ اللہ تعالیٰ نے قرآن پاک میں ایسا کرنے سے ہمارے پیغمبر صلی اللہ علیہ وسلم تک کو منع کر رکھا ہے۔ ڈاکٹر الغامدی نے توجہ دلائی کہ اگر کوئی شخص کسی غیر مسلم کے مرنے پر اس قسم کی دعا کرے کہ اللہ تعالیٰ اس کے ساتھ نرمی کا معاملہ کرے تو اس میں کوئی قباحت نہیں۔ نرمی کے معاملے اور جنت میں داخلے کی دعا کے درمیان فرق کیا جائے۔ رحم کھانے کا مطلب یہ نہیں ہوگا کہ غیر مسلم کو کفراور شرک کے باوجود دوزخ سے نکال کر جنت میں داخل کر دیا جائے۔

A social media controversy has been raised after Emirati singer Ahlam al Shamsi called on Twitter not to pray for mercy upon Indian Bollywood star Sridevi Kapoor after her death in Dubai.

The 49-year-old tweeted after the death of Sridevi, that it is not right to pray for mercy upon a non-Muslim irrespective of the good they have presented or not.

Saudi Islamic Scholar Sheikh Ahmed al-Ghamdi, however, has refuted the claim by the Emirati singer.

He said that as per the Holy Quran praying for mercy for non-Muslims living or dead is permissible.

Sheikh al-Ghamdi added that there is a distinct difference between praying for mercy or forgiveness.

He said that according to Prophet Mohammed (peace and blessings of Allah be upon him) praying for forgiveness for non-believers is forbidden.

“The Prophet (PBUH) forbade praying to God for forgiveness of his own mother, according to the Saheeh Muslim hadeeth however it only forbade praying for forgiveness and not praying for mercy upon a non-Muslim,” Sheikh al-Ghamdi said.

He told Al Arabiya that the exchange of accusations because of the issue of praying for mercy for non-Muslims has been blown up for no reason and that he was surprised people are preoccupied with such an issue

Source Al Arabia