کراچی / پشاور: کورونا وائرس سے بچاؤ کے لیے سندھ حکومت نے کل سے لاک ڈاؤن کا فیصلہ کیا ہے جب کہ خیبر پختون خوا میں جزوی طور پر لاک ڈاؤن کردیا گیا۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کی زیر صدارت ایک اہم اجلاس منعقد ہوا جس میں صوبے میں کورونا سے بچاؤ کے لیے لاک ڈاؤن کا فیصلہ کیا گیا۔ فیصلے کے مطابق صوبے بھر میں تمام صنعتیں، ادارے، دکانیں بند رہیں گی تاہم اشیائے ضروریہ پر اس کا اطلاق نہیں ہوگا، سبزی، پھل، دودھ، بیکری، میڈیکل اسٹورز، راشن کی دکانیں کھلی رہیں گی

لاک ڈاؤن کا اطلاق 22 مارچ کی رات 12 بجے سے ہوگا جس کا دورانیہ 14 روز تک ہوسکتا ہے، سندھ حکومت کے مطابق یہ فیصلہ صوبے کے عوام کو محفوظ رکھنے کے لیے کیا گیا ہے جس کا مقصد کورونا وائرس کو مزید پھیلنے سے روکنا ہے، لاک ڈاؤن کا باضابطہ اعلان جلد کیا جائے گا۔

خیبر پختون خوا

خیبر پختون خوا نے صوبے بھر میں لاک ڈاؤن کا اعلان کردیا۔ محکمہ ریلیف کے جاری کردی اعلامیے کے مطابق کورونا وائرس کے سبب صوبے بھر میں تین روز کے لیے لاک ڈاؤن کیا جارہا ہے، صوبے میں کریانہ، دودھ، ادویات ، بیکری، سبزی، فروٹ، پٹرول پمپ کھلے رہیں گے جب کہ بقیہ سرگرمیوں پر پابندی عائد ہوگی۔