پاکستان سپر لیگ کے تیسرے ایڈیشن کے 20ویں میچ میں کمار سنگاکارا کی شاندار اننگز کے باوجود ملتان سلطانز کی ٹیم لاہور قلندرز کے خلاف 114 رنز بنا کر ڈھیر ہو گئی۔

دبئی میں کھیلے جا رہے میچ میں ملتان سلطانز نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کیا جو ابتدا میں درست ثابت ہوا۔

اوپنرز کمار سنگاکارا اور احمد شہزاد نے اپنی ٹیم کو آٹھ اوورز میں 61 رنز کا شاندار آغاز فراہم کیا، سنگاکارا 30 گیندوں پر ایک چھکے اور 8 چوکوں کی مدد سے 45 رنز کی اننگز کھیلنے کے بعد پویلین لوٹے۔

احمد شہزاد کا ساتھ دینے صہیب مقصود آئے اور دونوں کھلاڑیوں نے ٹیم کے اسکور 92 تک پہنچا دیا لیکن اسی اسکور پر 32 رنز بنانے کے بعد شہزاد کی ہمت جواب دے گئی۔

 

ملتان سلطان نے ایک موقع پر 13 اوورز میں دو وکٹوں کے نقصان پر 93 رنز بنائے تھے اور ایسا محسوس ہوتا تھا کہ وہ باآسانی 150 رنز کا مجموعہ حاصل کرنے میں کامیاب رہیں گے لیکن نارائن اور شاہین افریدی کے شاندار اسپیل نے سلطانز کی امیدوں پر پانی پھیر دیا۔

 

نارائن نے 16 رنز بنانے والے صہیب مقصود کو آؤٹ کر کے ٹیم کو اہم کامیابی دلائی جس کے بعد اگلے اوور میں شاہین آفریدی نے تباہ کن اوور کراتے ہوئے ایک ہی اوور میں شعیب ملک، روس وائٹلی اور سیف بدر کو آؤٹ کر کے ملتان سلطانز کی بیٹنگ لائن کو تہس نہس کردیا۔

اسکور 108 تک پہنچا تو سہیل تنویز رن آؤٹ ہوئے جبکہ سہیل خان نے کیرون پولارڈ کی اننگز کے آگے فل اسٹاپ لگا کر سلطانز کی بڑے اسکور کی رہی سہی امیدوں پر بھی پانی پھیر دیا۔

 

شاہین آفریدی نے تباہ کن باؤلنگ کا سلسلہ جاری رکھتے ہوئے آخری اوور میں مزید دو وکٹیں حاصل کر کے لاہور قلندرز کو 114 رنز پر ٹھکانے لگا دیا۔

نوجوان فاسٹ باؤلر نے شاندار اسپیل کرتے ہوئے صرف چار رنز کے عوض پانچ وکٹیں حاصل کیں۔